کیا پے پال پاکستان آرہا ہے؟

paypal-pakistan 61

نگران وفاقی وزیر برائے انفارمیشن ٹیکنالوجی ڈاکٹر عمر سیف نے کہا ہے کہ اگر پے پال نے پاکستان آنا ہوا تو وہ 60 دنوں تک آ جائے گی، وہ اس سلسلے میں بہت پُرامید ہیں۔گزشتہ روز صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے پاکستانی فری لانسفرز کو رقم کی منتقلی میں پیش آنے والی مشکلات کے حوالے سے بات کی۔ انہوں نے بتایا کہ انہوں نے پے پال کو ایک تجویز دی ہے جس کے تحت پاکستان میں فری لانسرز کیلئے دوسرے ملکوں سے رقوم کی منتقلی ممکن ہو جائے گی۔
ڈاکٹر عمر سیف کا کہنا تھا کہ موجودہ ملکی حالات رقوم کی منتقلی کے بین الاقوامی نیٹ ورک پے پال کے براہ راست پاکستان آنے کیلئے سازگار نہیں ہیں۔ تاہم وہ مصر کے ماڈل پر ایک تیسرے فریق کے ذریعے پے پال کو پاکستان لانے کیلئے بات چیت کر رہے ہیں۔نگران وفاقی وزیر نے کہا کہ اس حوالے سے ایک بین الااقوامی نیٹ ورک سٹرائپ کے سنگاپور اور آئرلینڈ کے دفاتر سے بھی بات چیت چل رہی ہے۔ اُمید ہے کہ وہ بھی جلد پاکستان سے اپنی سروسز کا آغاز کر دیں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں