بجلی مزید مہنگی۔۔ فی یونٹ کتنے کا ملے گا؟ تفصیلات جانئیے

اسلام آباد:نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا)کی جانب سے سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کے باعث 6 ماہ کے لیے بجلی مہنگی ہونے کے فیصلے کے بعد ماہانہ 101 سے 200 یونٹ استعمال پرنان پروٹیکٹڈ صارفین کیلئے فی یونٹ 35 روپے 92 پیسے کا ہوجائے گا۔ذرائع کے مطابق اکتوبر 2023 سے مارچ 2024 تک فی یونٹ 2 روپے 40 پیسے اضافی بوجھ آئے گا، ستمبر کے بعد سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا پہلے سے لگا ایک روپے 24 پیسے فی یونٹ اضافہ ختم ہوجائے گا اور پرانی ایڈجسٹمنٹ ختم ہونے سے نئی ایڈجسٹمنٹ 3 روپے 28 پیسے کے بجائے 2 روپے 40 پیسے فی یونٹ رہ جائے گی۔ذرائع نے بتایاکہ سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا اطلاق پروٹیکٹڈ اور نان پروٹیکٹڈ صارفین پر ہوگا، ماہانہ 100یونٹ تک پروٹیکٹڈ صارفین کے لیے فی یونٹ17 روپے 7 پیسے ہوجائے گا، ماہانہ 101سے 200 یونٹ والے پروٹیکٹڈ صارفین کیلئے بجلی فی یونٹ 19 روپے 86 پیسے ہوجائے گا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ نان پروٹیکٹڈ گھریلو صارفین کیلیے فی یونٹ 28 روپے 16 پیسے کا ہوجائے گا اور ماہانہ 101 سے 200 یونٹ استعمال پرنان پروٹیکٹڈصارفین کیلئے فی یونٹ 35 روپے 92 پیسے کا ہوجائے گا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وفاقی حکومت سے منظوری کے بعد سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کا اطلاق کراچی سمیت ملک بھر کے صارفین پر ہوگا تاہم سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ سے صرف لائف لائن گھریلو صارفین مستثنی ہوں گے۔خیال رہے کہ گزشتہ روز نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا) سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی 3 روپے 28 پیسے فی یونٹ مہنگی کی ہے۔نیپرا نے سہ ماہی ایڈجسٹمنٹ سے متعلق اپنا فیصلہ وفاقی حکومت کوبھجوادیا اور وفاقی حکومت کی منظوری کے بعد اضافے کا اطلاق ہوجائے گا۔نیپرا کا کہنا ہے کہ بجلی صارفین کو 6 ماہ میں اضافی ادائیگیاں کرنا ہوں گی، بجلی صارفین اکتوبر 2023 سے مارچ 2024 تک ادائیگیاں کریں گے۔نیپرا کے مطابق صارفین کو ہر ماہ 3 روپے 28 پیسے فی یونٹ کے حساب سے ادائیگی کرنا ہوں گی اور اس اضافے کا اطلاق کے الیکٹرک صارفین پر بھی ہوگا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں