دو زبانوں کا قاتل کون؟ پٹھان تو سب سے اچھے ہوتے ہیں، چیف جسٹس کا دلچسپ مکالمہ

qazi-faiz-esa 26

اسلام آباد:سپریم کورٹ زمین کے تنازع سے متعلق کیس میں چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کا وکیل سے دلچسپ مکالمہ ہوا ہے جس میں چیف جسٹس نے کہاکہ پٹھان تو سب سے اچھے ہوتے ہیں، جتنا اخلاق آپ کو وہاں ملے گا ایسا کہیں اور نہیں ، پٹھانوں کا بس یہ ہے کہ وہ دشمنی بڑی لمبی چلاتے ہیں ، اس پروکیل نے برجستہ کہاکہ لگتا ہے میں نے غلط جگہ پر ایسی بات کردی۔
چیف جسٹس نے ساتھی ججز کو دیکھتے ہوئے کہا کہ مجھے نہیں لگتا کہ بینچ میں اس معاملے پر اتفاق رائے ہوگا جس پر عدالت میں قہقے لگ گئے،چیف جسٹس نے کہاکہ ہم نے شوقیہ مقدمہ بازی کو بند کرنا ہے ، وکیل نے کرائے کے معاہدے کی تاریخ کا حوالہ دیتے ہوئے آدھی اردو آدھی انگریزی بولی تو چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے کلاس لے لی اور کہا کہ آپ نے ابھی دو زبانوں کا قتل کیا ہے یا تو اردو میں بتائیں یا پوری انگریزی بولیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں