ہائیکورٹ ڈیکورم کا خیال کریں،ضروری نہیں آپ کے وارنٹ ہی نکالیں..جسٹس طارق محمود جہانگیری برہم

justice-tariq-mehmood-jhangri 28

اسلام آباد ہائیکورٹ نے پولیس حکام کو شیریں مزاری کیخلاف مقدمات سے متعلق رپورٹ دس روز میں جمع کرانے کا حکم دے دیا ہے۔اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس طارق محمود جہانگیری نے شیریں مزاری کی ای سی ایل سے نام نکلوانے کی درخواست پر سماعت کی۔ شیریں مزاری کے وکیل احسن پیرزادہ نے موقف اپنایا کہ 17 مئی 2023 کو انہوں نے عدالت میں رپورٹ دی جس کے مطابق شیریں مزاری کیخلاف تین مقدمات ہیں۔ جو رپورٹ پولیس نے مجھے دی تھی فائل میں اب موجود ہی نہیں۔ اس عدالت کا آرڈر ہے جس کی پولیس مسلسل خلاف ورزی کر رہی ہے۔ عدالت نے رپورٹ جمع نہ کرانے پر پولیس پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ ہائیکورٹ کے ڈیکورم کا خیال کیا کریں۔ پہلے پچیس ہزار جرمانہ عائد کیا تھا اب پچاس ہزار کریں گے۔ لاہور ہائیکورٹ کی طرح ضروری نہیں آپ کے وارنٹ ہی نکالیں۔ آج تک جتنے بھی مقدمات پٹیشنر کے خلاف ہیں ان کی رپورٹ دیں۔ عدالت نے پولیس سے شیریں مزاری کیخلاف مقدمات سے متعلق رپورٹ طلب کرتے ہوئے سماعت دس دن کیلئے ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں