طورخم بارڈر بند۔۔ہزاروں گاڑیاں پھنس گئیں۔۔کشیدگی تاحال برقرار

torkham-border 24

پشاور:افغان فورسز کے ساتھ طورخم سرحدی گزرگاہ کیقریب چیک پوسٹ کے قیام پرافغان فورسز کے ساتھ پیدا ہونے والی کشیدگی ساتویں روز بھی جاری رہی۔ سرحدی گزرگاہ ہرقسم آمدورفت کے لیے بند رہی۔سیکیورٹی حکام کے مطابق طورخم سرحدی گزرگاہ کے قریب چیک پوسٹ کیقیام سے کشیدگی تاحال برقرارہے۔ طورخم سرحدی گزرگاہ پر تجارتی سرگرمیوں سمیت ہر قسم کی آمدورفت معطل رہیں۔سرحد کی دونوں طرف ہزاروں کارگو گاڑیاں پھنسی ہوئی ہیں۔طورخم سرحد پر پاک افغان حکام کے مابین دو روز قبل مذاکراتی اجلاس بھی ہوا جس میں سرحدی گزرگاہ کھولنے پر بات چیت ہوئی تاہم اس اجلاس کے خاطرخواہ نتائج سامنے نہیں آئے۔واضح رہے کہ افغان فورسز سرحدی گزرگاہ کے قریب چیک پوسٹ قائم کرنا چاہتے تھے۔ جس پر پاکستان اور افغان فورسز کیدرمیان مسلح جھڑپ ہوئی۔واقعے میں افغان فورسز کے دو اہلکار مارے گئے جبکہ ایک ایف سی اہلکار زخمی ہوا تھا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں