بغاوت پراکسانے کا کیس ،دوران سماعت جج اور شہباز گل میں دلچسپ مکالمہ

Shahbaz-gill 222

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کے رہنما شہباز گل پر بغاوت پر اکسانے کے کیس میں فردجرم ایک بار پھر عائد نہ ہوسکی۔ ایڈیشنل سیشن جج طاہر عباس کی عدالت میں پی ٹی آئی رہنما شہباز گل اسلام آباد کی ضلع کچہری پیش ہوئے ۔ دوران سماعت جج نے شہباز گل سے مکالمہ کیا کہ آپ تو بیرون ملک جارہے ہیں، اس پر پی ٹی آئی رہنما نے کہا کہ آپ کی سالگرہ کی خوشی میں باہر جارہا ہوں، جنرل شعیب کے فیصلے پر سلام آپ کو پیش کرتا ہوں، جس پر جج نے استفسار کیا کہ آپ کی پاکستان واپسی کب ہے؟ شہبازگل نے جواب میں کہا کہ دور جانا ہے، تھوڑی مہربانی کردیں! اس پر جج نے کہا کہ آپ کوکون ساپیدل جانا ہے۔ شہبازگل کے وکیل نے کہا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ ابھی موصول نہیں ہوا، اس پر عدالت نے درخواست لکھ کر جمع کرنے کی ہدایت کردی ۔ بعد ازاں عدالت نے شہباز گل پر فرد جرم کی کارروائی مخر کرتے ہوئے سماعت 6 مئی تک ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں